TikTok in Pakistan: پاکستان میں ٹک ٹاک سروسز بحال کرنے کا اعلان، غیر مہذب مواد پر ہنوز پابندی

Reading Time: 2 minutes

پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (PTA) نے غیر اخلاقی اور غیر مہذب مواد کو کنٹرول کرنے کے لیے پلیٹ فارم کی یقین دہانی پر ٹک ٹاک (TikTok) کی سروسز بحال کر دی ہے۔ جس کے بعد ٹک ٹاک صارفین نے خوشی کا اظہار کیا ہے۔

اپنے ٹویٹر ہینڈل سے ایک پوسٹ میں ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی نے کہا کہ 20 جولائی 2021 کو پابندی کے نفاذ کے بعد سے پی ٹی آئی، ٹک ٹاک انتظامیہ کے ساتھ رابطے میں رہا ہے۔

ٹویٹ میں کہا گیا ہے کہ ’’مسلسل مصروفیت کے نتیجے میں ٹک ٹاک پلیٹ فارم کے انتظامیہ نے پی ٹی اے کو مقامی قوانین اور سماجی اصولوں کے مطابق غیر قانونی مواد کو کنٹرول کرنے کے لیے ضروری اقدامات کے تحت اپنے عزم کا یقین دلایا ہے‘‘۔

ٹک ٹاک کی وارننگ!

کمپنی نے یہ بھی یقین دہانی کرائی ہے کہ جو صارفین مسلسل غیر قانونی مواد اپ لوڈ کرنے میں ملوث ہیں ان کو پلیٹ فارم استعمال کرنے سے روک دیا جائے گا۔ اس طرح کی یقین دہانیوں کو مدنظر رکھتے ہوئے پی ٹی اے نے کہا کہ اس نے فوری طور پر ٹک ٹاک پر سے پابندی ہٹانے کا فیصلہ کیا ہے۔

پی ٹی اے نے ٹک ٹاک (TikTok) کی سروسز بحال کر دی ہے۔ تصویر: @PTAofficialpk
پی ٹی اے نے ٹک ٹاک (TikTok) کی سروسز بحال کر دی ہے۔ تصویر: @PTAofficialpk

’’پی ٹی آئی پلیٹ فارم کی نگرانی جاری رکھے گا تاکہ اس بات کو یقینی بنایا جا سکے کہ پاکستان کے قانون اور معاشرتی اقدار کے خلاف غیر قانونی مواد پھیلایا نہ جائے‘‘۔

واضح رہے کہ رواں برس مارچ میں پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی نے پی ایچ سی کے حکم کی تعمیل میں انٹرنیٹ سروس فراہم کرنے والوں کو فوری طور پر ٹک ٹاک تک رسائی کو بلاک کرنے کی ہدایت دی تھی۔

۔(علامتی تصویر:Pixabay)۔
۔(علامتی تصویر:Pixabay)۔

پی ٹی اے نے ایک بیان میں کہا کہ ’’پشاور ہائی کورٹ کے احکامات کی تعمیل کرتے ہوئے پی ٹی اے نے سروس فراہم کرنے والوں کو فوری طور پر ٹک ٹاک ایپ تک رسائی کو بلاک کرنے کی ہدایات جاری کی ہیں۔ آج ایک کیس کی سماعت کے دوران پی ایچ سی نے ایپ کو بلاک کرنے کا حکم دیا ہے‘‘۔